• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • کورونا ریلیف فنڈ سے لیمبرگینی کے مزے ، شہری کو 9 سال قید ہو گئی

کورونا ریلیف فنڈ سے لیمبرگینی کے مزے ، شہری کو 9 سال قید ہو گئی

امریکا میں کورونا سے متاثر ہوئے افراد کے لیے خصوصی فنڈز کا اعلان کیا گیا تھا، لیکن کچھ لوگوں نے اس میں دل کھول کر دھوکہ دہی سے کام لیا۔

ہیوسٹن میں شہری نے کورونا فنڈز میں 1.6 ملین ڈالرز کا فراڈ کیا جس پر اسے 9 سال کی قید سنا دی گئی ہے، عالمی میڈیا کے مطابق 30 سالہ شہری نے 28 کروڑ سے زائد روپوں کی رقم کورونا فنڈز کی مد میں حاصل کی لیکن اسے مہنگی چیزیں خریدنے میں اڑا ڈالا۔

شہری نے ان پیسوں سے 2 لاکھ ڈالرز کی لیمبرگینی، 85 ہزار ڈالر کا فورڈ پک اپ ٹرک، 14 ہزار کی رولیکس واچ خریدیں۔

پرائیس نامی شہری نے  ستمبر میں وائر فراڈ اور منی لانڈرنگ کے الزامات کا اعتراف کیا تھا جب اس نے پے چیک پروٹیکشن پروگرام میں قرض کے لیے درخواست دی تھی۔

جس کے بعد فیڈرل حکام کی جانب سے 7 لاکھ ڈالرز کی مالیت کی قیمت کی رقم اور مہنگا سامان ضبط کر لیا گیا تھا۔ پرائیس نے  1.6 ملین ڈالر وصول کرنے سے پہلے 2.6 ملین ڈالر قرض کی درخواست بھی کی تھی۔

Advertisements
julia rana solicitors london

امریکا میں ریلیف فنڈ سسٹم سے فائدہ اٹھانے والا یہ پہلا کیس نہیں ہے، امریکی محکمہ انصاف کے مطابق فراڈ ڈویژن نے 95 سے زیادہ فوجداری مقدمات میں 150 سے زیادہ افراد کے خلاف مقدمہ چلایا ہے اور دھوکہ دہی کے فنڈز سے 75 ملین ڈالرز سے زائد رقم ضبط کی گئی ہے۔

Facebook Comments

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply