• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • پاکستان نے ویکسین نہ کروانے والے مسافروں کے ہوائی سفر پر پابندی لگا دی

پاکستان نے ویکسین نہ کروانے والے مسافروں کے ہوائی سفر پر پابندی لگا دی

سول ایوی ایشن اتھارٹی (سی اے اے) نے اعلان کیا ہے کہ صرف مکمل طور پر ویکسین شدہ اندرون اور باہر جانے والے مسافروں کو نیشنل کمانڈ اور آپریشن کی پابندیوں کے مطابق ہوائی راستے سے سفر کرنے کی اجازت ہوگی۔
سی اے اے نے کہا کہ یکم اکتوبر سے ، 18 سال اور اس سے زیادہ عمر کے صرف مکمل طور پر ویکسین والے مسافروں کو پاکستان سے  باہر ،  اور اندرون ملک  ہوائی سفر کرنے کی اجازت دی جائے گی جن کے پاس کووڈ ویکسین سرٹیفکیٹ ہونا بھی لازمی ہے۔
18 سال سے کم عمر کے مسافروں کو ویکسینیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پاکستان جانے کی اجازت دی جا سکتی ہے۔ 15 سے 18 سال تک کے پاکستانی مسافروں کو 31 اکتوبر تک ویکسینیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پاکستان جانے کی اجازت ہوگی۔
1 نومبر سے 15 سے 18 سال کی عمر کے مسافروں کے لیے ویکسینیشن کے جزوی اصول لاگو ہوں گے اور 15 سے 18 سال کے مسافروں کے پاکستان کے اندرون ملک سفر کے لیے ویکسینیشن کا مکمل معیار یکم دسمبر سے لاگو ہو جائے گا۔
18 سال سے کم عمر اور بیرون ملک تعلیم حاصل کرنے والے پاکستانی طلباء کو ویکسینیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پاکستان جانے کی اجازت ہوگی۔ تاہم ، انہیں پاکستان سے بیرون ملک سفر کے دوران ویکسین لگانے کی ضرورت ہوگی۔
18 سال سے کم عمر کے غیر ملکی پاسپورٹ رکھنے والوں کو ویکسینیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر پاکستان جانے کی اجازت ہوگی۔ مسافروں کو ویکسینیشن کے خلاف طبی طور پر مشورہ دیا جاتا ہے اور ایک کلاسیفائیڈ سپیشلسٹ کا سرٹیفکیٹ ، ڈاکٹر کو بغیر ویکسینیشن ، یا جزوی ویکسینیشن کی ضرورت کے اندرون پاکستان جانے کی اجازت ہوگی۔
وہ مسافر جو یکم اکتوبر سے پہلے پاکستان سے بیرون ملک سفر کرچکے ہیں ، انہیں ویکسینیشن کی حیثیت سے قطع نظر پاکستان کے اندر جانے کی اجازت ہوگی۔
ویکسینیشن کی ضرورت سے یہ چھوٹ پاکستان آنے کے 72 گھنٹوں کے اندر اندر ایسے مسافروں کی گھریلو پروازوں کو جوڑنے پر بھی لاگو ہوگی۔

  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com
  • julia rana solicitors
  • merkit.pk
  • julia rana solicitors london

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply