• صفحہ اول
  • /
  • خبریں
  • /
  • آئی فون کا بچوں کے تحفظ کیلئے نیا سیکیورٹی فیچر متعارف

آئی فون کا بچوں کے تحفظ کیلئے نیا سیکیورٹی فیچر متعارف

اسمارٹ فونز بنانے والی امریکی کمپنی ایپل نے بچوں کے تحفظ کے لیے نئے سیکورٹی فیچرز متعارف کرادیے ہیں جس کے تحت فون پرنازیبا تصاویر بھیجنے یا آنے پر بچوں کے والدین کو اطلاع دی جائے گی۔

نئے فیچر کے تحت کسی بھی آئی فون میں بچوں کی نازیبا تصاویر ہونے کی صورت میں متعلقہ حکام کو بھی خودکار طریقے سے آگاہ کردیا جائے گا۔ آئی فون کے نئے سیفٹی ٹولز متعارف کرادیئے گئے ہیں۔ یہ فیچرز ابتدائی طورپر امریکہ، پھر دنیا بھر میں دستیاب ہوں گے۔

FaceLore Pakistan Social Media Site
پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com

ایپل کا کہنا ہے کہ نئے فیچرز نازیبا تصاویر بھیجنے یا وصول کرنے والے بچوں کی نگرانی اور ان کو جنسی استحصال سے بچانے کے لیے متعارف کرائے گئے ہیں۔

نئے فیچر کے تحت نازیبا تصاویر بھیجنے یا وصول ہونے کی صورت میں متعلقہ حکام کو بھی خودکار طریقے سے آگاہ کیا جائے گا۔

ایپل کا کہنا ہے کہ بچے اگر نازیبا تصاویر بھیجتے یا وصول کرتے ہیں تو اس صورت میں آئی فون والدین کو وارننگ بھیجے گا۔ بچوں کے ساتھ ایسی نازیبا تصاویر شیئر ہونے کی صورت میں خودکار طریقے سے حکام کو بھی اطلاع دی جائے گی۔

نئے فیچر متعارف کرانے کا بنیادی مقصد بچوں کے جنسی استحصال سے متعلق مواد کے پھیلاؤ کو روکنا ہے۔

نئے فیچر کے تحت اگر بچے نازیبا تصویر دیکھنے کا انتخاب نہ کریں تو خود کار طریقے سے یہ تصویر دھندلی ہوجائے گی۔

ایپل کا مزید کہنا ہے کہ موبائل فون پر لنکڈ فیملی اکاؤنٹس استعمال کرنے والے والدین کو بھی ایسے مواد سے متعلق نوٹیفکیشن موصول ہوگا۔

نئے فیچر کے تحت بچے اگر نازیبا تصاویر دیکھنے کا انتخاب کریں تو ایسی صورت میں بچوں کے والدین کو پیشگی اطلاع دی جائے۔

Advertisements
julia rana solicitors

ایپل کا مزید کہنا ہے کہ اگر کوئی بچہ جنسی طور پر نازیبا تصویر بھیجنے کی کوشش کرتا ہے تو اس کی روک تھام کے لیے بھی نئے فیچرز متعارف کرائے گئے ہیں۔

  • merkit.pk
  • julia rana solicitors
  • FaceLore Pakistan Social Media Site
    پاکستان کی بہترین سوشل میڈیا سائٹ: فیس لور www.facelore.com
  • julia rana solicitors london

خبریں
مکالمہ پر لگنے والی خبریں دیگر زرائع سے لی جاتی ہیں اور مکمل غیرجانبداری سے شائع کی جاتی ہیں۔ کسی خبر کی غلطی کی نشاندہی فورا ایڈیٹر سے کیجئے

بذریعہ فیس بک تبصرہ تحریر کریں

Leave a Reply